ذلفی بخاری کی کا دورہ جینوا سوٹزرلینڈ اور احتجاجی پریس کانفرنس

 Press Conference

Press Conference

سوئیزرلینڈ (علی جیلانی) برن پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ سابقہ الیکٹڈ باڈی کا اجالس سوٹزرلینڈ کے دارالحکومت برن میں منعقد ہوا جسمیں پورے سوٹزرلینڈ سے آے ھوئے پی ٹی آئی کی گزشتہ الیکٹڈ تنظیموں )زیورخ، لوزرن،بازل، برن، جینوا اور دوسرے شہروں سے آے آفیشلز (نے شرکت کی اجالس میں شریک تمام سابقہ آفیشلزنے 12 تاریخ کے ہونے والے جینوا پروگرام جسمیں مشیر وزیراعظم ذلفی بخاری کی آمد اور شرکت کے حوالے سے سب نے اپنے خیاالت کا اظہار کیا اجالس میں شریک شکیل احمد سابقہ الیکٹڈ صدر پاکستان تحریک انصاف سوٹزرلینڈ نے اپنے احتجاج کا اظہار کرتے ہوئے کہا اس پروگرام کو دوبارہ ریشیڈیول کیا جائے۔

پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کے تمام کارکنوں کے ساتھ مشاورت کے بعد دوبارہ منعقد کیا جائے تاکہ پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کے ووٹرز اور تمام بزنس کمیونٹی کی رضامندی اور ان سبکو شامل ہونے کا موقعہ ملے یاد رہے کہ بزنس کمیونٹی اور سوٹزرلینڈ میں مقیم پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کے جیالے اور الیکشن میں حصہ لینے والے تمام طبقہ فکر کے لوگوں میں سخت مایوسی اور غصہ پایہ جارہا ہے کہ ذاتی تعلقات پر اور میرٹ سے ہٹ کر پچھلے الیکشن میں ہارے ہوئے ن لیگ اور پیپلزپارٹی کے کے چند لوگوں کو مال کر مفادات پرست گروپ کو اس پروگرام کو آرگنائیز کرنے کا اختیار دیا گیا جبکہ پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کا اپنا ایک فعال اور الیکشن پراسیس کے عمل سے بنا ہوا ایک پورا سیٹ اپ موجود اور فعال ہے۔

ارباب اختیار سے احتجاج میں حصہ لینے والی پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کی سابقہ انفارمیشن سیکرٹری بیگم عنبر جیالنی صاحبہ نے اس شدید مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کہ جب پی ٹی آئی کے وومن ونگ کو بنانے اور پی ٹی آئی کے منشور اور وزیراعظم عمران خان کے ویژن کو گھر گھر پھیالنے کا وقت تھا تو ہم نے رات دن ایک کرکے اس عمل کو یقینی بنایا اور وومن ونگ پی ٹی آئی کا قیام اور پچھلے 2سال سےکمییونٹی پروگرام زیورخ برن بازل جینوا آلعرض پورے سوٹزرلینڈ میں کامیابی کے ساتھ کیے اور پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ کو فیملیز میں فعال کیا جنکے انعقاد پر ایک کثیر رقم خرچ کی گئی مگر جب خکومتی آفیشلز آئیں تو وہ پروگرام زاتی مفادات کی نظر ہوجائیں اس عمل میں بھی پورے سوٹزرلینڈ کے کارکنوں کو نظر انداز کر دیا گیا جو کہ قابل مذمت ہے۔

زیورخ سے آے سابق نائب صدر الیکٹڈ باڈی پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ طارق ناصر نے اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے پہلی مرتبہ سوٹزرلینڈ میں الیکشن پراسیس کے عمل کو یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ بزنس کمیونٹی کو پاکستان میں انوسٹمنٹ کرنے میں اور وزیراعظم پاکستان عمران خان کےڈیمز فنڈز کی اپیل پر نا صرف سوئس میں عوامی شعور کو بیدار کرنے کے ساتھ ایک کثیر رقم بھی پی ٹی آئی سابقہ آفیشلزابقہ ووٹرز اور سوئس نیشنل لوگوں کی مدد سے بھجوانے میں اپنا کردار احسن طریقے سے سر انجام دیا۔

سابقہ ترجمان پی ٹی آئی سوٹزرلینڈ عمیر اعوان نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ سمجھ سے باالتر ہے کہ ہمیں ایمبیسی آف پاکستان کی طرف سے بال کر اس پروگرام کو آرگنائیز کرنے کا کہا گیا جینیوا سے آے پی ٹی آئی کے سی ایم سی ممبر شیر افضل اعوان نے مطالبہ کیا کہ اس پروگرام کو ری شیڈول کرکے سوٹزرلینڈ کے تمام پی ٹی آئی کارکنان کو اس بات کا یقین دالیا جائے کہ پی ٹی آئی پاکستان یورپ آئیندہ ایسے کسی غیر اخالقی عمل کو فروغ نہیں ہونے دیں گے کیونکہ ذاتی مفادات اقربا پروری نواز شریف اور زرداری گروپس کا وطیرہ ہیں پی ٹی آئی کا نہیں۔