وزیراعظم عمران خان کی امریکا آمد کے موقع پر پاکستانی مسیحیوں نے شدید احتجاج کیا، واٹسن گل

ایمسٹرڈیم (واٹسن سلیم گل) وزیر اعظم عمران خان کے دورۂ امریکا کے موقع پر امریکہ میں مقیم پاکستانی مسیحی کمیونٹی نے۲۰ جولائ بروز ہفتہ شام ۵ بجے وائٹ ہاؤس کے سامنے پرامن احتجاج کیا، اس احتجاج کا بنیادی مقصد پاکستان میں آئے دن ہندو اور مسیحی بچیوں کے اغوا ، جنسی ذیادتی ، قتل ، جبری تبدیلئ مذہب اور جبری شادیوں کے بڑھتے ہوئے رجحان کی روک تھام کے لئے آواز بلند کرنا تھا۔ پاکستانی مسیحی کمیونٹی نے وزیراعظم پاکستان عمران خان، چیف آف آرمی اسٹاف، چیف جسٹس سے اپیل کی کہ خدارا پاکستان میں مسیحیوں کی چادر اور چار دیواری کے تقدس کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ مسیحیون کو برابری کے حقوق دیئے جائیں، توہین رسالت کے قوانین کے غلط استمال کو روکا جائے،یوحنا آباد کے مسیحی قیدیوں کو رہا کیا جائے۔ مینارٹی لبریشن یو ایس اے نے اس مظاہرے کا اہتمام کیا تھا۔ صدر مینارٹی لبریشن جناب پیٹرجان ، وکٹر گل، سامیہ نعمان، آفاق الفریڈ، پاسٹر نعمان یونس، پاسٹر عمران، سولمن ولسن، راجر جان، رضوان مسکارانس، نوید سرفراز اور جانسن لعزرس نے مظاہرین سے خطاب کیا ساتھ ہی پاکستان کی بقا اور سلامتی کے لئے دعا بھی کی گئ۔

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest

Pakistani Christians Protest