سفارت خانہ پاکستان کویت میں یوم یکجہتی کشمیر کے موقعہ پر تقریب

Kashmir Solidarity Day Ceremony

Kashmir Solidarity Day Ceremony

کویت (محمد عرفان شفیق) یوم یکجہتی کشمیر کی مناسبت سے سفارت خانہ پاکستان کویت میں تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی سرکردہ شخصیات اور تنظیموں کے صدور نے شرکت کی، تقریب کا باقاعدہ آغاز تلاوت قرآن مجید سے ہوا جس کی سعادت حافظ عامر نے حاصل کی،جس کے بعد کشمیریوں کی جدوجہد کے حوالہ سے ایک دستاویزی فلم دکھائی گئی ، جس میں نہتے کشمیری عوام پر انڈین فوج کے مظالم دکھائے گئے۔

سفیر پاکستان غلام دستگیر نے صدر پاکستان عارف علوی اور وزیراعظم عمران خان کے یوم یکجہتی کشمیر کے حوالہ سے خصوصی پیغامات پڑھ کر سنائے، اس کے بعد انہوں نے تمام شرکاء کا شکریہ ادا کیا جو ورکنگ ڈے کے باوجود تشریف لائے، انہوں نے کہا کہ جب سے کشمیریوں کی جدوجہد آزادی کی تحریک شروع ہوئی ہے ایک لاکھ کے قریب نہتے کشمیریوں کو شہید کیا جا چکا ہے اور ہزاروں خواتین کی عزتیں پامال کی گئیں۔

کشمیر میں کوئی گھر ایسا نہیں جس کے کسی نہ کسی فرد نے جام شہادت نوش نہ کیا ہو،انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ سلامتی کونسل میں مسئلہ کشمیر انڈیا ہی لے کر گیا تھا اور انڈیا نے وعدہ کیا تھا کہ کشمیریوں کی قسمت کا فیصلہ ان کی مرضی کے مطابق استصواب رائے سے کیا جائے، جس کے بعد انڈیا وعدے سے مکر گیا ،پاکستان کشمیریوں کے حق خود ارادیت کے لئے کشمیریوں کی جدجہد کی سیاسی اور سفارتی حمایت جاری رکھے گا۔

انہوں نے کہا کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے فرمایا تھا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اور کشمیر کے بغیر پاکستان نامکمل ہے۔

آخر میں حافظ محمد شبیر ڈائریکٹر پاکستان بزنس سنٹر نے کشمیریوں کی جدوجہد آزادی کی کامیابی،پاکستان اور کویت کی ترقی و سلامتی کیلئے دعا کرائی۔